’شروع مودی نے کیا، ختم ہم کریں گے‘

پاکستان میں ہوا بازی اور سائنس و ٹیکنالوجی کے وفاقی وزرا نے انڈیا کے لیے فضائی اور زمینی راستے مکمل بند کرنے کا عندیہ دیا ہے۔

وفاقی وزیر فواد چودھری نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان انڈیا کے لیے پاکستان کی فضائی حدود کے استعمال پر مکمل پابندی عائد کرنے پر غور کر رہے ہیں۔

فواد چودھری نے ٹویٹ کیا ہے کہ ’کابینہ کے اجلاس میں یہ تجویز بھی زیرغور آئی کہ انڈیا کے لیے پاکستان کے زمینی راستے بھی مکمل بند کیے جائیں جس سے وہ افغانستان سے تجارت کرتا ہے۔‘

قبل ازیں سول ایوی کے جاری ایک بیان کے مطابق ہوابازی کے وفاقی وزیر غلام سرور خان نے کہا تھا کہ اس حوالے سے فیصلہ تمام قوانین پر غور کرنے کے بعد اگلے 48 گھنٹوں میں کیا جائے گا۔

فواد چودھری کے مطابق ان فیصلوں سے قبل قانونی پہلوؤں پر مشاورت کی جا رہی ہے۔ انہوں نے لکھا کہ ’مودی نے شروع کیا، ہم ختم کریں گے۔‘

سول ایوی ایشن کے مطابق غلام سرور خان نے کہا کہ ’کابینہ اجلاس میں پاکستانی فضائی حدود بند کرنے پر مشاورت کی گئی۔ ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں لیا گیا۔ پاکستانی فضائی حدود بند کرنے پر اگلے 48 گھنٹوں میں فیصلہ متوقع ہے۔ یہ فیصلہ تمام قوانین پر غور کرنے کے بعد لیا جائے گا۔‘

یاد رہے کہ پاکستان کے فروری میں انڈین طیاروں کی بمباری کے بعد اپنی فضائی حدود بند کی تھیں اور پھر پاکستان کی جانب سے انڈین جنگی طیارہ گرائے جانے کی کشیدگی میں انڈیا نے بھی اپنی ایئر سپیس کو فروری کے آخری ہفتے میں پروازوں کے لیے بند کیا تھا۔

عالمی خبر رساں اداروں کے مطابق فضائی حدود بند کرنے کے اقدام سے دوںوں ملکوں کو اربوں روپے کا نقصان ہوا تھا جبکہ پاکستان اور انڈیا سے بیرون ملک سفر کرنے والے مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا تھا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close