حملہ آور سلفی مسلمان تھا، پیرس پولیس

فرانس کے دارالحکومت پیرس کے پولیس ہیڈ کوارٹر میں چار ساتھی اہلکاروں کو چاقو کے وار کر کے ہلاک کرنے والے شخص سلفی مسلمان تھا۔

پیرس میں انسداد دہشت گردی کے پراسیکیوٹر ژاں فرانکوئس رکرڈ نے میڈیا نمائندوں کو بتایا کہ 45 سالہ حملہ آور کمپیوٹر کا ماہر اور رجعت پسند اسلامی خیالات کا حامل تھا۔

خیال رہے کہ لنچ ٹائم کے دوران چار ساتھی اہلکاروں کو قتل کرنے والے شخص کو پولیس نے فائرنگ کرکے ہلاک کر دیا تھا۔

میکائل ہارپن نامی شخص کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ اس نے دس برس قبل اسلام قبول کیا تھا اور پولیس ہیڈ کوارٹر میں ٹرینی تھا۔

بتایا گیا ہے کہ وہ ایک ایسے شعبے سے منسلک تھا جہاں پولیس جہادیوں اور رجعت پسند مسلمانوں کے کوائف اکھٹے کرتی ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close