”جان اللہ کو دینی ہے ویڈیو نہیں فوٹیج بنائی تھی“

پاکستان میں انسداد منشیات کے محکمے کے وزیر شہریار آفریدی نے ایک بار پھر کہا ہے کہ انہوں نے جان اللہ کو دینی ہے اور مسلم لیگ ن کے رہنما رانا ثنا اللہ کے خلاف ہیروئن کا کیس منتقی انجام کو پہنچے گا۔

بدھ کو اسلام آباد میں وزیر مملکت برائے انسداد منشیات شہریار آفریدی نے کہا کہ وہ عدالتی فیصلے کا احترام کرتے ہیں تاہم رانا ثنااللہ اب بھی ملزم ہیں، ان کی ضمانت ہوئی ہے بری نہیں کیے گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ سترہ دن میں عدالت کو تمام ثبوت دے دیے لیکن کیس میں تاخیری حربے اختیار کیے گئے۔


وزیر مملکت برائے انسداد منشیات شہریار آفریدی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ جس معاشرے میں عدالتوں کا احترم نہیں وہ کھوکھلے ہو جاتےہیں۔

رانا ثنا اللہ کیس پر بات کرتے ہوئے بولے ہم نے سترہ دن میں ثبوت فراہم کیے لیکن کیس میں تاخیری حربے استعمال کیے گئے۔


شہریار افریدی کا کہنا تھا کہ کسی صورت کوئی ڈیل نہیں کریں گے ۔ کچھ لوگ علاج کے لیے باہر گئے شاپنگ کر رہے ہیں لیکن علاج اب بھی شروع نہ ہوا۔۔۔ عدالتوں کا احترام نہیں ہوگا تو ملک مقصد حاصل نہیں کرسکے گا۔


انہوں نے کہا کہ میری باتوں کا مذاق اڑیا گیا جان اللہ کو دینی ہے۔لیکن حقیقت یہ ہے کہ وزیراعظم اور وزیروں کا کام اداروں کوسہولت دینا ہے کام کرنا اداروں کا کام ہے۔۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close