سعودیہ نے امریکہ کو فوجی اڈے فراہم کر دیے

سعودی عرب نے ایران کے خلاف امریکی کو فوجی اڈے فراہم کر دیے ہیں۔

سعود فرمانروا شاہ سلمان نے خیلج عرب کی سکیورٹی مزید بڑھانے کے لیے ملک میں امریکی فوجیوں کی تعیناتی کی منظوری دی ہے۔

سعودی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’سعودی عرب اور امریکہ خطے کو لاحق خطرات کے پیش نظر اپنے طویل مدتی تعلقات کو مزید مستحکم کرہے ہیں۔‘

سعودی عرب کی سرکاری نیوز ایجنسی نے وزارت دفاع کے ایک اہلکار کے حوالے سے بتایا ہے کہ امریکی فوجیوں کی تعیناتی کے فیصلے کا مقصد خطے میں امن قائم رکھنے، سکیورٹی اور استحکام کے لیے کی جانے والی مشترکہ کوششوں کو بڑھانا ہے۔

امریکی محکمہ دفاع نے اپنے ایک بیان میں اس اقدام کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ابھرتے ہوئے خطرات کو روکنے کے لیے سعودی عرب میں  فوجی دستے تعینات کرے گا۔

یاد رہے کہ امریکی فوجیوں کی تعیناتی گذشتہ مہینے پینٹاگون کی جانب سے کیے جانے والے اس اعلان کے بعد کی گئی جس میں کہا گیا تھا کہ امریکہ مشرق وسطیٰ میں اپنی فوجی طاقت بڑھائے گا۔

یپینٹاگون نے جون میں کہا تھا کہ وہ مشرق وسطیٰ میں ایک ہزار فوجی بھیجے گا۔

سعودی اخبار عرب نیوز نے خبر دی ہے کہ امریکہ ایران سے کشیدگی کے تناظر میں سعودی ایئر بیس پر جنگی جہاز، دفاعی میزائل نظام اور ممکنہ طور پر پانچ سو فوجی تعینات کر رہا ہے۔

سعودی دفاعی حکام کا کہنا ہے کہ کچھ امریکی فوجی اور دفاعی نظام پہلے ہی ریاض کے جنوب میں واقع پرنس سلطان ایئر بیس پر پہنچ چکے ہیں۔

خیال رہے کہ خلیج میں واشنگٹن اور تہران کے درمیان کشیدگی عروج پر ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close